دنیائے کرکٹ میں تاریخ رقم۔۔۔پوری کی پوری کرکٹ ٹیم18اسکور پر آؤٹ

لندن: انگلینڈ میں شیفرڈ نیم کینٹ کرکٹ لیگ میں 150سال سے زائد پرانے بیکنہم کرکٹ کلب کی ٹیم صرف 18رنز پر ڈھیر ہو گئی اور میچ صرف 61منٹ کے اندر ہی تمام ہو گیا۔بیکسلے کرکٹ کلب کے خلاف بیکنہم کرکٹ کلب نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا لیکن ان کا فیصلہ اتنا تباہ کن ثابت ہو گا یہ شاید انہیں بھی معلوم نہ تھا۔

میچ شروع ہوا تو بیکنہم کی ٹیم صرف 11.2اوورز میں 18رنز پر ڈھیر ہو گئی جو مذکورہ کلب کا 152سالہ تاریخ میں کم ترین ٹوٹل ہے اور ٹیم 50منٹ بعد فیلڈنگ کے لیے میدان میں موجود تھی۔ٹیم کی جانب سے سب سے زیادہ کامیاب بلے بازوں الیگزینڈر سین، ولیم میک ویکار اور کیلم لینوس نے 4، 4 رنز سکور کیے جب کہ 5 کھلاڑی اپنا کھاتا بھی نہ کھول سکے اور کل 21 گیندوں کا سامنا کیا۔

سکاٹ لینڈ کی57ون ڈے میں نمائندگی کرنے والے کیلم میک لیوڈ نے 6 اوورز میں 5رنز دے کر 6وکٹیں حاصل کیں جب کہ بقیہ 4وکٹیں جیسن بین کے حصے میں آئیں۔یہ 152سال پرانے کلب بیکنہم کی تاریخ کا سب سے کم ترین سکور ہونے کے ساتھ ساتھ سیفرڈ نیم کینٹ کرکٹ لیگ میں بھی کسی ٹیم کا اب تک سب سے کم سکور ہے۔اس سے قبل ہارویل کرکٹ کلب کی ٹیم 2010ءمیں بلیک ہیتھ کرکٹ کلب کے خلاف289رنز کے ہدف کے تعاقب میں محض 21رنز پر ڈھیر ہوگئی تھی ،بلیک ہیتھ کرکٹ کلب کی جانب سے روئیل براتھ ویٹ نے8شکار کیے تھے ۔

بیکسلے کرکٹ کلب کو کم ترین ہدف کے تعاقب میں حسب توقع کوئی مشکل پیش نہ آئی اور انہوں نے صرف 12منٹ میں 3.3اوورز میں ہدف تک رسائی حاصل کر کے 10وکٹ سے کامیابی حاصل کر لی۔بیکسلے کرکٹ کلب کے اوپنر ایڈن گرگز اور کرسٹوفر لاس بالترتیب 9گیندوں پر3چوکوں کی مدد سے 12اور 12گیندوں پر1چوکے کی مدد سے 4رنز بناکر ناقابل شکست رہے جب کہ 6رنز ایکسٹرز کی شکل میں ملے۔

Comments

comments

Leave a Comment