علیم ڈار چھاگئے: عالمی ریکارڈ قائم کرکے پوری دنیا میں پاکستان کا نام روش کر دیا

لاہور(ویب ڈیسک)پاکستان کے عالمی شہرت یافتہ امپائر علیم ڈار سب سے زیادہ انٹرنیشنل میچوں میں امپائرنگ کا فریضہ انجام دینے والے دنیا کے پہلے آئی سی سی ایلیٹ آفیشل بن گئے ہیں۔تفصیلات کے مطابق علیم ڈار اب تک 350 انٹرنیشنل میچز میں امپائرنگ کا سنگ میل عبور کر چکے ہیں۔علیم ڈار کا اس حوالے سے کہنا ہے

کہ ساڑھے تین سو میچوں میں امہائرنگ کا سنگ میل عبور کرنا ایک اعزاز کی بات ہے۔ان کا کہنا ہے کہ ورلڈ ریکارڈ قائم کرنے پر آئی سی سی، پاکستان کرکٹ بورڈ اور پاکستانی عوام کا شکر گزار ہوں۔انہوں نے کہا کہ آج جس مقام پر ہوں پاکستان کی وجہ سے ہوں، مستقبل میں بھی کوشش ہو گی کہ اسی طرح ملک کا نام روشن کروں۔خیال رہے کہ علیم ڈار مسلسل تین سال آئی سی سی کے بہترین امپائر کا اعزاز بھی حاصل کر چکے ہیں۔علیم ڈار کی شاندار کارکردگی کی وجہ سے حکومت پاکستان کی جانب سے انہیں ستارہ امتیاز اور پرائڈ آف پرفارمنس کے اعزازات سے بھی نوازا جا چکا ہے۔ واضح رہے کہ اس سےقبل پاکستانی امپائر علیم ڈار نے ایک بار پھر پاکستان کا نام بلند کر دیا۔امپائرنگ کی فیلڈ میں اپنا لوہا منوایا اور آج سب سے زیادہ میچز کرانے والے امپائر بن گئے ۔علیم ڈار نے تین سو بتیس انٹر نیشنل میچز کراکر جنوبی افریقا کے روڈی کرٹزن کے تین سو اکتیس میچز کا ریکارڈ توڑا ۔آئی سی سی کی جانب سے علیم ڈار کو تین بار بہترین امپائر کا ایوارڈ بھی دیا جا چکا ہے ۔ واضح رہے کہ پاکستان کے عالمی شہرت

یافتہ امپائر علیم ڈار نے انٹرنیشنل کرکٹ میں سب سے زیادہ 332 میچوں میں امپائرنگ کا عالمی ریکارڈ بنا دیا۔کیپ ٹاؤن میں جنوبی افریقہ اور سری لنکا کے درمیان پیر سے شروع ہونے والے دوسرے ٹیسٹ میں امپائرنگ کرکے علیم ڈار نے ورلڈ ریکارڈ اپنے نام کیا۔2000

میں امپائرنگ کیریئر کا عالمی سطح پر آغاز کرنے والے علیم اب تک 109 ٹیسٹ، 182 ون ڈے اور 41 ٹی ٹوئنٹی میچز میں امپائرنگ کے فرائض انجام دے چکے ہیں، وہ اس کے علاوہ 73 میچوں میں ٹی وی امپائر کا کردار بھی ادا کر چکے ہیں۔اس سے قبل سب سے زیادہ میچوں میں امپائرنگ کا ریکارڈ جنوبی افریقہ کے روڈی کرٹزن کے پاس تھا جنہوں نے مجموعی طور پر 331 میچوں میں امپائرنگ کی۔یاد رہے کہ علیم ڈار 2009، 2010 اور 2011 میں لگاتار تین سال بہترین امپائر کا آئی سی سی کا ایوارڈ اپنے نام کر چکے ہیں۔علیم ڈار نے ریکارڈ بنانے پر انٹرنیشنل کرکٹ کونسل اور پاکستان کرکٹ بورڈ بی کے ساتھ ساتھ شائقین اور فیملی کا بھی شکریہ ادا کیا۔(م،ش)

Comments

comments

Leave a Comment