فخر زمان نے بھارت کے لئے خطرے کی گھنٹی بجا دی ایشیاء کپ میں بھارت کے خلاف میچ کے لئے اپنا ٹارگٹ بتا دیا

لاہور: قومی ٹیم کے اوپنر فخرزمان نے بھارت کے خلاف ایشیا کپ میچ میں چیمپئنز ٹرافی فائنل کی کارکردگی دہرانے کے عزم کا اظہار کیا ہے۔قذافی اسٹیڈیم میں جاری تربیتی کیمپ کے دوران میڈیا سے بات کرتے ہوئے فخر زمان کا کہنا تھا کہ ایبٹ آباد میں کنڈیشنگ کیمپ کا فائدہ ہوا، لاہور میں اچھی پریکٹس کا موقع مل رہا ہے جب کہ بھارت کے خلاف میچ میں چیمپئنز ٹرافی فائنل کی کارکردگی دہرانے کی پوری کوشش کروں گا۔

فخرزمان کا کہنا تھا کہ میری کوشش ہوتی ہے کہ ٹیم کے لیے لمبا اسکور کروں، انٹرنیشنل کرکٹ کا دباﺅ ہوتا ہے، بھارت کیخلاف میچ میں بھی دباﺅ ہوگا، اس روز بہتر کھیلنے والی ٹیم ہی جیتے گی۔ انہوں نے کہا کہ ویرات کوہلی ایک ورلڈ کلاس کھلاڑی ہیں تاہم امید ہے کہ ٹیم اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے ٹائٹل اپنے نام کرنے میں کامیاب ہوجائے گی۔

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے بتایا کہ بولنگ پریکٹس بھی کررہا ہوں اور ضرورت پڑنے پر بطور باﺅلر بھی اپنی صلاحیتوں کا اظہار کرسکتا ہوں۔یاد رہے کہ ایشیاءکپ کرکٹ ٹورنامنٹ 15 سے 28 ستمبر تک متحد ہ عرب امارات میں کھیلا جائے گا جس میں پہلی مرتبہ چھ ٹیمیں ایکشن میں دکھائی دیں گی، پاکستان،، بھارت،، سری لنکا،، بنگلہ دیش اور افغانستان نے براہ راست ایونٹ میں جگہ بنائی تھی جب کہ ہانگ کانگ، ملائیشیا، نیپال، اومان، سنگاپور اور متحدہ عرب امارات میں سے کوئی ایک ٹیم کوالیفائنگ مرحلہ عبور کر کے ایونٹ تک رسائی حاصل کرے گی۔

ٹیموں کو دو گروپس میں تقسیم کیا گیا ہے، پاکستان،، بھارت اور کوالیفائر ٹیم کو گروپ اے، بنگلہ دیش،، سری لنکا اور افغانستان کو گروپ بی میں رکھا گیا ہے، ہر گروپ سے دو ٹیمیں سپر فور مرحلے کیلئے کوالیفائی کریں گی جہاں پر چاروں ٹیمیں آپس میں مدمقابل ہوں گی اور دو ٹاپ ٹیموں کے درمیان فائنل کھیلا جائے گا۔ 15 ستمبر کو افتتاحی میچ میں سری لنکا کا مقابلہ بنگلہ دیش سے ہو گا، پاکستانی ٹیم 16 ستمبر کو کوالیفائر ٹیم کے خلاف مہم کا آغاز کرے گی، گرین شرٹس 19 ستمبر کو روایتی حریف بھارت کے آمنے سامنے ہوں گے، سپر فور مرحلے کے میچز 21 سے 26 ستمبر تک کھیلے جائیں گے، دو ٹاپ ٹیموں کے درمیان فائنل 28 ستمبر کو دبئی میں کھیلا جائےگا۔

Comments

comments

Leave a Comment