قسمت کی دیوی محمد عباس پر مریبان، شاندار کارکردگی دکھانے پر فاسٹ باؤلر کو بڑی خوشخبری مل گئی

لیڈز: لارڈز ٹیسٹ کے ہیرومحمد عباس کی شاندار کارکردگی کو دیکھتے ہوئے لیسٹر شائر کاونٹی نے ان سے اگلے سیزن کے لئے بھی معاہدہ کر لیا ہے۔محمد عباس لیسڑ شائر کاو¿نٹی کی نمایندگی کیلیے انگلینڈ میں رکیں گے اوراس سال وہ پہلی بار کاونٹی چیمپین شپ کھیلیں گے۔محمد عباس نے لارڈز ٹیسٹ میں64رنز دے

کر8وکٹ حاصل کئے تھے۔عباس نے سات ٹیسٹ میچوں میں40وکٹ لے کر سب کو حیران کردیا ہے۔محمد عباس نے یہاں شائع ہونے والے ایک انٹر ویو میں کہا ہے کہ مجھے یہ مقام مشکل سے ملاہے۔میں چمڑے کی فیکڑی میں ملازمت کرتا رہا اورایک ویلڈنگ کی دکان پر بھی کام کیا۔سیالکوٹ کے ایک وکیل کے پاس بھی چھوٹی سی ملازمت کی لیکن کرکٹ کھیلنے کا جنون کی حد تک شوق تھا۔مجھے میری مسلسل محنت کا صلہ ملا لیکن میں ایک پراسس سے گذر کر پاکستانی ٹیم میں آیا ہوں اس مقام کو حاصل کرنے کے لئے انتھک محنت کی ہے۔ واضح رہے کہ لیڈز ٹیسٹ میں انگلینڈ نے پاکستان کو ایک اننگز اور 55 رنز سے شکست دے کر دو میچز کی سیریز ایک ایک سے برابر کردی۔اظہر علی 11، حارث سہیل 8، اسد شفیق 5، سرفراز احمد 8 اور شاداب خان 4 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔امام الحق اور عثمان صلاح الدین بمشکل 30 کا

ہندسہ عبور کر سکے۔اننگز کی شکست کے بعد دو میچز کی سیریز ایک ایک سے برابر ہوگئی ہے، پاکستان نے لارڈز ٹیسٹ میں انگلینڈ کو شکست دی تھی۔لیڈز ٹیسٹ کے تیسرے روز پاکستان کی پہلی اننگز میں 174 رنز کے جواب میں انگلینڈ کی پوری ٹیم اپنی پہلی اننگز میں 363 رنز بناکر آؤٹ ہوگئی اور اسے 189 رنز کی واضح برتری حاصل ہوئی۔انگلینڈ کے جوس بٹلر اور سیم کرن نے 7 وکٹوں کے نقصان پر 302 رنز سے نامکمل اننگز کا آغاز کیا تو مجموعی اسکور میں 17 رنز کے اضافے کے بعد سیم کرن پویلین لوٹ گئے۔سیم کرن 20 رنز بناکر محمد عباس کی گیند پر اسد شفیق کو کیچ تھما بیٹھے جب کہ انگلش ٹیم کی نویں وکٹ اسٹورٹ براڈ کی گری جو 2 رنز بناکر فہیم اشرف کا شکار بنے۔آخری آؤٹ ہونے والے کھلاڑی اینڈرسن تھے جنہیں حسن علی نے پویلین کی راہ دکھائی اور انگلینڈ کی پوری ٹیم پہلی اننگز میں 363 کے مجموعی اسکور پر آؤٹ ہوگئی۔انگلش ٹیم کی جانب سے جوس بٹلر 80، ڈومینک بیس 49 اور الیسٹر کک 46 رنز بناکر نمایاں رہے۔

Comments

comments

Leave a Comment