ڈبلن ٹیسٹ، پاکستانی ٹیم نے ٹیسٹ کرکٹ کی 141سالہ تاریخ بدل ڈالی

ڈبلن،لاہور: پاکستان کرکٹ ٹیم نے ڈبلن میں کھیلے جارہے آئرش تاریخ کے پہلے ٹیسٹ میںنئی تاریخ رقم کردی ہے، جس نے وہ اعزاز پالیاہے جو آج تک کسی اور ٹیم کے حصے میں نہیں آیاتھا۔۔پاکستان نے اپنی پہلی اننگز 9وکٹوں کے نقصان پر 310رنزپر ڈکلیئرکی تو وہ اپنی تاریخ کا پہلا ٹیسٹ کھیلنے والی کسی بھی ٹیم کے خلاف پہلی ہی اننگز ڈیکلیئرکرنے والی پہلی ٹیم بن گئی،اس سے قبل ٹیسٹ کرکٹ کی 141سالہ تاریخ میں ایسا کبھی نہیں ہوسکاتھا۔

آئرش ٹیم نے اس میچ میں پاکستان کو 310رنزبنانے کا موقع دیا جو کسی بھی ٹیم کی جانب سے اپنی پہلی ہی بولنگ اننگزمیں دئیے گئے چوتھے زیادہ رنزہیں۔اس بدترین ریکارڈ میں بھارتی ٹیم سب سے آگے ہے جس نے 1992ءمیں اپنی تاریخ کی پہلی ٹیسٹ اننگزکھیلنے والی زمبابوے کی ٹیم کو 429رنزبنانے کا موقع دیاتھا۔
پاکستان ٹیم نے ڈبلن ٹیسٹ کے تیسرے روز شاداب خان، فہیم اشرف اور محمد عامر کے آﺅٹ ہوجانے کے بعد اننگز ڈیکلیئرڈ کی تو پاکستان کا سکور9وکٹوں کے نقصان پر 310رنز تھا۔

کیریئرکا پہلا ٹیسٹ میچ کھیلنے والے آل راﺅنڈر فہیم اشرف 83رنز بناکر پاکستانی اننگزکے ٹاپ سکورررہے۔اسد شفیق نے 62اور شاداب خان نے 55رنزکی نمایاں اننگز کھیلیں۔آئرلینڈکی جانب سے مرتاغ نے چار،تھامپسن نے تین جبکہ بوئڈرینکن نے دو وکٹیں حاصل کیں۔جوابی اننگزمیں آئرلینڈ کی ٹیم اپنی پہلی اننگز میں محض 130رنز بناکر پوولین لوٹ گئی تھی ،،پاکستان کے لیے عباس نے 4،شاداب نے 3،عامر نے دو اور فہیم اشرف نے ایک وکٹ لی تھی ۔۔پاکستان اور آئرلینڈ کے درمیان کھیلے جارہے پہلے ٹیسٹ میچ کا پہلا دن بارش کی نذر ہوگیاتھا جب کہ دوسرے دن کے کھیل کا بھی ایک حصہ کم روشنی کے سبب ضائع ہواتھا۔

Comments

comments

Leave a Comment